داعش کے ظلم کا خاتمہ؛ عراقی عوام نے سکھ کا سانس لینا شروع کر دیا

دہشت گردوں کے ساتھ جنگ میں موصل کے شہریوں نے بھاری جانیں و مالی قربانیاں دی لیکن اب امید اور روشن مستقبل کی کرنیں موصل کی گلیوں اور بازاروں میں نمودار ہونے لگی ہیں۔ کاروبار کھلنے لگے اور معیشت کا پہیہ ایک بر پھر چلنے لگا ہے۔ تین سالہ جبر کے خاتمے کے بعد لوگ خوش ہیں اور انہوں نے اپنی مرضی کی زندگی گذارنا شروع کر دی ہے۔